داڑھی صاف کرنے سے منع کرنے پر شوہر امام صاحب کے خلاف بیوی نے درج کرایا طلاق سمیت سنگین دفعات میں مقدمہ۔
علی گڑھ: اتر پردیش کے علیگڑھ سے ایک عجیب و غریب اور حیرت انگیز معاملہ سامنے آیا ہے جہاں بیوی نے اپنے شوہر کے خلاف محض اس وجہ سے طلاق مانگنے سمیت سنگین دفعات میں مقدمہ درج کریں کیونکہ بیوی کے کہنے سے شوہر نے اپنی داڑھی صاف کروانے سے سے منع کر دیا تھا۔ ادھر شوہر نامدار نے بھی ذہنی اذیت دینے کا معاملہ درج کرایا ہے۔

یہ واقعہ علی گڑھ کے قصبہ پلخانہ کے جلال الدین کے ساتھ ہوا، وہ ایک عالم اور ایک مسجد میں پیش امام ہیں، ان کی شادی علی گڑھ کے ہی امام الدین کی لڑکی وینا سے ہوئ تھی ۔شادی کے بعد سے ہی بیوی داڑھی صاف کرانے کئیضد کرنے لگی۔اس معاملہ پر جھگڑا بڑھتا گیا بات ہاتھا پائی اور گالی گلوج تک پہنچ گئ،اس نے شادی توڑنے کی دھمکی بھی دی ۔جلال الدین کا کہناہے کہ گزشتہ اکتوبر کو وہ زیورات ونقدی لے کر میکے چلی گئ جب لینے گیا تو ساتھ آنے سے بھی انکار نہیں کیا بلکہ میرے ساتھ بدکلامی کی اور مجھ پر وپریوار والوں پر جہیز مانگنے اور طلاق کا مطالبہ کرنے کے ساتھ کئ سنگین دفعات کے تحت مقدمہ درج کرادیا ۔بہرحال ،مظلوم، شوہر نے پولیس کو اپنی درد بھری روداد سنائی۔ مذہبی حقوق تلفی کا الزام لگانے کے ساتھ بیوی پر ذہنی اذیت رسانی کا معاملہ درج کرایا اب پولیس تفتیش میں لگی ہے۔

DT Network