سول سروسز 2021 کے امتحان کے نتیجہ میں مسلمانوں کی اب تک کی سب سے خراب کارکردگی، محض تین فیصد کوملی کامیابی، ٹاپ 100 میں ایک بھی مسلم کو نہیں ملی جگہ۔
نئی دہلی: پیر کو یوپی ایس سی کے ذریعہ جاری کئے گئے سول سروسز امتحان 2021 میں کامیاب مسلم امیدواروں کا تناسب بہت کم ہے۔ 685 کامیاب امیدواروں میں سے مسلم امیدواروں کی تعداد صرف 22 ہے جو کل امیدواروں کا صرف 3 فیصد ہے۔ ایک بھی مسلم امیدوار ٹاپ 100 میں جگہ نہیں بنا سکا۔
UPSC مسلم امیدواروں کی فہرست: یونین پبلک سروس کمیشن (UPSC) نے پیر کو سول سروسز امتحان-2021 (سول سروسز 2021 کے امتحان کے نتائج) کے نتائج کا اعلان کیا ہے۔ شروتی شرما نے پہلی پوزیشن حاصل کی جبکہ انکیتا اگروال اور گامنی سنگلا نے بالترتیب دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کی۔ کمیشن نے بتایا کہ کل 685 امیدوار پاس ہوئے جن میں 508 مرد اور 177 خواتین شامل ہیں۔ 685 میں سے 244 عام زمرے سے، 73 معاشی طور پر انتہائی کمزور طبقے سے، 203 معاشی طور پر کمزور طبقے سے، 105 درج فہرست ذات سے، اور 60 عام زمرے س اُمیدوار ہیں۔

اس بار 685 کی فہرست میں صرف 22 مسلم امیدواروں نے جگہ بنائی ہے۔ تعداد کے لحاظ سے، آل انڈیا سول سروسز میں مسلمانوں کی تعداد اور بھی کم ہو کر تقریباً تین فیصد رہ گئی ہے۔ یہ بھی بدقسمتی کی بات ہے کہ ایک بھی مسلم امیدوار پہلے 100 میں جگہ بنانے میں کامیاب نہیں ہو سکا۔ یہ گزشتہ دہائی میں مسلم امیدواروں کی سب سے خراب کارکردگی ہے۔ پچھلے سال 31 مسلمانوں یعنی تقریباً 4.07 فیصد امیدواروں نے سول سروسز میں جگہ بنائی تھی۔

کامیاب مسلم امیدواروں کی فہرست
درج ذیل مسلم امیدواروں کی مکمل فہرست ہے جنہوں نے سول سروسز کے تازہ ترین بیچ میں کوالیفائی کیا ہے۔ ان کے نام کے آگے ان کی رینک درج ہیں۔
1: اریبہ نعمان، 109
2: محمد صبور خان، 125
3: سید مصطفیٰ ہاشمی، 162
4: افنان عبدالصمد، 274
5: ارشد محمد
6: محمد ثاقب عالم، 279
7: اسرار احمد کچلو، 287
8: محمد عبدالرؤف شائق، 309
9: نازش عمر انصاری، 344
10: فیصل خان، 364
11: شمائلہ چوہدری، 368
12: ماویس تک، 386
13: محمد قمر الدین خان، 414
14: محمد شبیر 419
15: فیصل رضا، 441
16: معصوم رضا خان، 457
17: آصف الف، 464
18: تحسین بانو داوادی، 483
19: شیخ محمد زیب ذاکر، 496
20: محمد صدیق شریف، 516
21: محمد شوکت عظیم، 545
22: انور حسین، 600

2014 سے 2020 میں مسلم امیدواروں کا فیصد
2020 میں، کل 761 میں سے کل 31 مسلم امیدواروں نے سول سروسز کے امتحان میں کوالیفائی کیا۔ 2019 میں، 42 مسلمانوں نے امتحان پاس کیا تھا جبکہ 2018 میں صرف 27 مسلمان ہی فائنل کے نتیجے میں پہنچے تھے۔ 2016 اور 2017 مسلم امیدواروں کے لیے روشن ترین دور تھے۔ 2016 میں 52 مسلمان کامیاب امیدواروں کی فہرست میں شامل تھے جب کہ 2017 میں ان کی تعداد 50 تھی۔ 2015 میں، یونین پبلک سروس کمیشن (UPSC) کے ذریعہ تجویز کردہ 1,078 امیدواروں میں سے 34 مسلمان تھے، جب کہ 2014 میں، کل 1,236 امیدواروں میں سے 38 مسلمان تھے۔
ڈاکٹر شاہ فیصل 2010 میں ٹاپر بنے۔
2013 میں، کل 34 مسلمانوں نے امتحان پاس کیا، جب کہ 2012 میں، 30 مسلمان کامیاب امیدواروں میں شامل تھے، جن میں سے چار ٹاپ 100 میں شامل تھے۔ 2012 میں کامیاب امیدواروں میں 30 مسلمان اور 2011 میں 31 مسلمان تھے۔ 2010 میں 875 کامیاب امیدواروں میں سے 21 مسلمان تھے، جن میں کشمیر کے ڈاکٹر شاہ فیصل نے قومی سطح پر امتحان میں ٹاپ کیا۔ 2009 میں 791 کامیاب امیدواروں کی فہرست میں 31 مسلمان تھے۔