ممبئی: ممبئی کی عدالت میں قومی تحقیقاتی ایجنسی نے چارج شیٹ داخل کرتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ انڈر ورلڈ ڈان داؤد ابراہیم نے دہشت گردی کی سازش کو انجام دینے کے لیے ۲۵ لاکھ روپے ممبئی بھیجے ہیں۔ چارج شیٹ میں حوالہ کے ذریعے کروڑوں روپے کی دہشت گردی کی فنڈنگ ​​کا ذکر ہے۔ چارج شیٹ میں این آئی اے نے کہا ہے کہ ڈی کمپنی ایک بار پھر ممبئی کو نشانہ بنانے کی کوشش کر رہی ہے۔قومی تحقیقاتی ایجنسی نے دعویٰ کیا ہے کہ انڈر ورلڈ ڈان داؤد ابراہیم ایک بار پھر سرگرم ہے۔ ممبئی میں دہشت گردانہ سرگرمیوں کے لیے سورت سے فنڈنگ ​​کے ذریعے 25 لاکھ روپے حوالہ کے ذریعے ممبئی پہنچایا گیا ہے۔ چارج شیٹ میں این آئی اے نے یہ بھی دعویٰ کیا ہے کہ چار برسوں میں حوالہ کے ذریعے دہشت گردانہ سرگرمیوں کے لیے 12 کروڑ روپے حاصل کیے گئے۔بتایا جا رہا ہے کہ داؤد ابراہیم دہشت گردانہ کارروائیوں کو انجام دینے کے لیے دوبارہ ممبئی کو نشانہ بنا رہا ہے۔ یہ رقم دبئی اور سورت کے راستے ممبئی بھیجی گئی۔ این آئی اے نے داؤد ابراہیم، چھوٹا شکیل، اس کے بہنوئی محمد سلیم قریشی عرف سلیم فروٹ سمیت عارف ابوبکر شیخ اور شبیر ابوبکر شیخ کے خلاف چارج شیٹ داخل کیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ اس رقم کے لیے ایک کوڈ بھی استعمال کیا گیا ہے۔داؤد ابراہیم عرف شیخ داؤد حسن اور شکیل شیخ عرف چھوٹا شکیل کے علاوہ چارج شیٹ میں گرفتار تین ملزمان عارف ابوبکر شیخ، شبیر ابوبکر شیخ اور محمد سلیم قریشی عرف سلیم ہیں۔ انڈر ورلڈ ڈان داؤد ابراہیم کی غیر قانونی سرگرمیوں کے لیے رقم فراہم کرنے کے الزام میں گرفتار کیے گئے ملزم کے خلاف بمبئی سیشن کورٹ کی خصوصی این آئی اے عدالت میں چارج شیٹ داخل کی گئی ہے۔اس کے علاوہ داؤد ابراہیم اور چھوٹا شکیل کو اس معاملے میں دو مفرور ملزمان کے طور پر چارج شیٹ میں نامزد کیا گیا ہے۔ قومی تحقیقاتی ایجنسی نے مئی میں ممبئی سے انڈر ورلڈ ڈان داؤد ابراہیم کی کارروائیوں کے لیے رقم فراہم کرنے کے الزام میں ممبئی سمیت مہاراشٹر کے کئی مقامات پر چھاپے مارے تھے، جس کے بعد داؤد کے ساتھی چھوٹا راجن کے بہنوئی سلیم فروٹوالا، عارف ابوبکر شیخ اور شبیر ابوبکر کو گرفتار کیا گیا تھا۔چارج شیٹ میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ کس طرح داؤد ابراہیم کروڑوں روپے حوالہ کے ذریعے ملک بھیجتا تھا تاکہ یہاں دہشت گردانہ سرگرمیاں انجام دی جا سکیں۔ چارج شیٹ کے مطابق انڈر ورلڈ ڈان داؤد ابراہیم نے دہشت گردی کی سازش رچنے کے لیے 25 لاکھ روپے ممبئی بھیجے تھے۔ داؤد ابراہیم اور اس کے قریبی ساتھی چھوٹا شکیل نے ممبئی میں دہشت گردی کی سرگرمیوں اور بڑے واقعات کو انجام دینے کے لیے پاکستان سے 25 لاکھ روپے دبئی کے راستے بھیجے تھے۔چارج شیٹ کے مطابق رقم سورت کے راستے بھارت آئی اور پھر ممبئی پہنچی۔ یہ رقم عارف شیخ اور شبیر شیخ کو حوالہ کے ذریعے دی گئی۔ چارج شیٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ 4 سالوں میں تقریباً 12 سے 13 کروڑ روپے حوالہ کے ذریعے دہشت گردی کی فنڈنگ ​​کے لیے بھیجے گئے۔ این آئی اے نے اپنی چارج شیٹ میں کہا ہے کہ پاکستان سے بھارت لائے گئے 25 لاکھ روپے دہشت گردانہ سرگرمیوں کو انجام دینے کے لیے بھیجے گئے تھے۔