عمران مسعودکے تازہ بیان سے سیاسی ہلچل تیز، کانگریس لیڈر کے ذریعہ سماجوادی پارٹی کی تعریف کرنے سے کانگریسی حیران۔

دیوبند،30 ستمبر(رضوان سلمانی) کانگریس کے سینئر لیڈر عمران مسعود کے ایک تازہ بیان نے سبھی کانگریسیوںکو حیران کردیا،انہوںنے نہ صرف سماجوادی پارٹی کی تعریف کی بلکہ آئندہ اسمبلی انتخابات کے متعلق کہاکہ سماجوادی پارٹی ہی یوپی میں بی جے پی کو ہراسکتی ہے، عمران مسعود کے اس بیان کو لیکر سیاسی گلیاروں میں ایک مرتبہ پھر بحث شروع ہوگئی اور ان کے سماجوادی پارٹی میں آنے کی قیاس آرائیوں نے زور پکڑ لیا ہے، عمران مسعود کا بیان اس وقت سامنے آیاہے جب آئندہ10 اکتوبر سماجوادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو علاقہ کے قصبہ تیترو آئینگے۔ گزشتہ روز کانگریس کے قومی سکریٹری اور دہلی انچارج عمران مسعود کے بیان نے سیاسی ہلچل بڑھا دی ہے۔ عمران مسعود کا کہنا ہے کہ یوپی میں بی جے پی کو شکست دینے کے لیے ایس پی واحد پارٹی ہے ۔ انہوںنے کہاکہ اترپردیش میں سماجوادی پارٹی کی مضبوط پکڑ ہے اورسماجوادی پارٹی ہی یوپی میں بی جے پی کو روک سکتی ہے۔ عمران مسعود کے مطابق سماج وادی پارٹی کا ووٹ شیئر دیگر اپوزیشن جماعتوں سے زیادہ ہے۔ جب عمران مسعود سے پوچھا گیا کہ یوپی میں پرینکا گاندھی کے چہرے پر کانگریس انتخابی میدان میں ہے تو عمران نے اس سوال کا بھی چونکا دینے والا جواب دیا، انہوںنے کہاکہ پرینکاگاندھی سخت محنت کررہی ہے، لیکن پھر بھی ہمارے ووٹروں کا جھکاو ¿ کہیں اور ہے ، لہٰذا ایس پی اور کانگریس کو مل کر الیکشن لڑنا چاہیے۔ ایس پی کے حق میں عمران مسعود کے اس بیان سے واضح طور پر نظر آرہا ہے کہ عمران مسعود جلد کانگریس چھوڑ سکتے ہیں کیونکہ کئی دنوں سے یہ بات بحث کا موضوع ہے کہ عمران مسعود کانگریس چھوڑ کر جلدی ہی سائیکل پر سوار ہو جائیں گے۔واضح رہے کہ یہ سیاسی گھرانہ عرصہ سے ضلع کی سیاست میں خاصہ اثر و رسورخ رکھتاہے، ضلع کی 7 اسمبلی سیٹوں پر یہ گھرانہ کافی مضبوط پکڑ رکھتاہے، لیکن سماجوادی پارٹی میں ان کو تمام ساتوں سیٹوںکا اختیار ملنا ناممکن نظر آرہاہے۔ اس سلسلہ میں سماجوادی پارٹی کے شہر رکن اسمبلی سنجے گرک نے کہاکہ عمران مسعود کا بیان کا ہم خیر مقدم کرتے ہیں،انہوںنے کہاکہ اس مرتبہ اسمبلی انتخابات سماجوادی پارٹی اور بی جے پی کے درمیان ہی ہوگی اور ریاست میں سماجوادی پارٹی کی حکومت بنے گی۔ جبکہ کانگریس کے ضلع صدر مظفرعلی کاکہنا تھا کہ عمران مسعود کا یہ بیان ان کااپنا ذاتی بیان ہے ،کانگریس پارٹی پرینکا گاندھی کی قیادت میں یوپی کا انتخاب مضبوطی کے ساتھ لڑے گی اور پارٹی 2022ءکے اسمبلی انتخابات کے لئے مضبوطی سے کام کررہی ہے۔