ملک میں پائے گئے نئےویرینٹ "اومیکرون" کے دو معاملے، مرکزی حکومت نے کہا کہ گھبرانے کی ضرورت نہیں۔
نئی دہلی:گزشتہ چند دنوں سے دنیا میں ہلچل مچا دینے والے کورونا وائرس کے نئے ورينٹ اومیکرون نے آخر کار بھارت میں بھی دستک دے دی ہے۔ اس کے دو مریض کرناٹک میں سامنے آئے ہیں۔ وزارت صحت نے جمعرات کو ایک پریس کانفرنس کرتے ہوئے یہ جانکاری دی۔ مریضوں میں سے ایک کی عمر 66 سال ہے جبکہ دوسرے کی عمر 46 سال ہے۔ دونوں میں اس وقت کوئی سنگین علامات ظاہر نہیں ہو رہی ہیں۔

مرکزی حکومت نے دی معلومات
یہ معاملات دو غیر ملکی شہریوں میں پائے گئے ہیں جو 11 اور 20 نومبر کو بنگلورو آئے تھے۔
10 مسافروں کے نمونے جینوم سیکوینسنگ کے لیے بھیجے گئے ہیں۔ یکم دسمبر کی آدھی رات سے آج صبح 8 بجے تک 7976 مسافروں کے RT-PCR ٹیسٹ کیے گئے ہیں۔
یہ معاملہ سامنے آنے کے بعد حکومت نے کہا ہے کہ گھبرانے کی ضرورت نہیں ہے لیکن بیداری ضرور ہے۔ لوگ کووڈ، مناسب برتاؤ جاری رکھیں اور زیادہ ہجوم سے بچیں۔
حکومت نے کہا کہ اس قسم کے سنگین معاملات اب تک دنیا میں کہیں بھی رپورٹ نہیں ہوئے ہیں۔

اب تک دنیا کے 29 ممالک میں SARS CoV-2 کے Omicron قسم کے 373 کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں۔
بھارت صورتحال پر نظر رکھے ہوئے ہے۔

DT Network