جمال خاشقجی کے قتل کے بعد پہلی بار ترک صدر رجب طیب اردوان سعودی عرب کے دورہ پر پہنچے۔
ترک صدر رجب طیب اردوان دو روزہ دورے پر سعودی عرب پہنچ گئے۔ غیر ملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق ترکی کے صدر رجب طیب اردوان  سعودی فرمانروا شاہ سلمان کی دعوت پر جمعرات کو 2 روزہ دورے پر جدہ پہنچے ہیں۔
رپورٹس کے مطابق ترک صدارتی دفتر سے جاری بیان میں کہاگیا ہے کہ ترک صدر سعودی حکام سے ملاقاتوں میں دوطرفہ تعلقات بحالی پر تبادلہ خیال کریں گے جبکہ دورہ سعودیہ کے دوران ترکی کیساتھ تعاون بڑھانے پر بات چیت ہوگی۔
خبررساں ایجنسی کے مطابق ترک صدر نے2017 کے بعد سعودی عرب کا پہلا دورہ کیا ہے کیوں کہ 2018 میں سعودی صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے بعد دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کشیدہ ہو گئے تھے۔
سعودی خبررساس ایجننسی ’ایس پی اے‘ کے مطابق گورنر مکہ مکرمہ شہزادہ خالد الفیصل، وزیر مملکت و رکن کابینہ و مشیر قومی سلامتی ڈاکٹر مساعد العیبان نے کنگ عبدالعزیز انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر ترک صدر کو خوش آمدید کہا۔ 
اس موقع پر انقرہ میں سعودی سفارتخانے کے ناظم الامور محمد الحربی، مکہ مکرمہ ریجن پولیس کے ڈائریکٹر میجر جنرل صالح الجابری، کنگ عبدالعزیز انٹرنیشنل ایئرپورٹ کے ڈائریکٹر عصام نور اور مکہ مکرمہ ریجن میں شاہی پروٹوکول کے سربراہ احمد عبداللہ ظافر بھی استقبال کے لیے موجود تھے۔