امروہہ: نفیس عبّاسی کے نام سڑک منسوب کرنے پر چیرمین بلدیہ کونسل امروہہ کا نایاب عبّاسی ڈگری کالج میں استقبال۔ 
امروہہ: سالار غازی۔
معاشرے کی حقیقی خدمت یہ ہے کہ ہم اپنے لوگوں کے لیے کچھ ایسا کریں، جس کے ثمرات تمام طبقات اور آنے والی نسلوں کو یکساں طور پر مل سکیں، اس مشن کے تحت مرحوم نفیس عباسی نے امروہہ میں نایاب عباسی پی جی کالج قائم کرکے واضح پیغام دیا تھا کہ ان کی خدمات سب کے لیے برابر ہے، یہ خیالات آج نفیس عباسی پی جی کالج میں بلدیہ کے صدر، ریٹائرڈ ٹیچر ایوارڈ تقریب اور نفیس عباسی نے سیمینار میں کیا۔ 
میونسپل کونسل امروہہ کی صدر مسز ششی جین نے کہا کہ عباسی نے امروہہ کے تمام شعبوں میں تعلیم، ادب، سماج اور ترقی میں اہم کردار ادا کیا ہے، جسے فراموش نہیں کیا جا سکتا۔ یہ فخر کی بات ہے کہ آج ہم نے نفیس عباسی روڈ مرادآبادی گیٹ سے نایاب عباسی پی جی کلیج تک شہر کے مکینوں کے لیے وقف کر دیا ہے۔حافظ محمد انس کے تلاوت کلام پاک سے شروع ہونے والے پروگرام میں ڈاکٹر مبارک علی نے نعت پاک پیش کی بلاک پرمکھ گوریندر سنگھ ڈھلو نے تعلیم اور سماجی خدمت کے میدان میں عباسی صاحب کے تعاون پر روشنی ڈالی اور اسے امروہہ کے لیے باعث فخر قرار دیا۔ اس موقع پر ڈاکٹر مصباح احمد صدیقی نے عباسی صاحب کی زندگی پر روشنی ڈالتے ہوے ان کی جدوجہد کا تذکرہ کیا۔پروگرام میں شعبہ ڈرائنگ پینٹنگ کی سربراہ ڈاکٹر ریشما زیدی، ماسٹر اسلم عثمانی، بھونیش شرما، اقبال احمد خان، انجینئر دانش صدیقی عادل عباسی، ڈاکٹر اطہر کمال، ڈاکٹر طارق عظیم حبیب احمد ایڈوکیٹ، پروفیسر مہتاب علی ، خرم امروہوی ، خرم حسن رضوی، شان حیدر بیبک، ہری سنگھ موریا نے اپنے اپنے خطابات میں کہا کہ معاشرے کی خدمت کے لیے ان کی خدمات کو فراموش نہیں کیا جاسکتا عوامی خدمت میں عباسی کا نام بہت مشہور رہا ہے، انہوں نے خاموشی سے بے شمار خاندانوں کی دیکھ بھال کی اور تعلیم کے پھیلاؤ سے ہمیشہ وابستہ رہے۔مسلم کمیٹی کے صدر سرتاج عالم منصوری اور جنرل سکریٹری حبیب احمد ایڈوکیٹ نے چیر پرسن صدر ششی جین کا شکریہ ادا کیا اور متعلقہ دفاتر سے اس سڑک کو نفیس عباسی مارگ کے طور پر استعمال کرنے کی اپیل کی اور عباسی صاحب کے فرزند سے مرحوم کے نامکمل کاموں کو مکمل کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ چیئرمین منیجنگ کمیٹی فیروز عباسی نے تمام مہمانوں کو خوش آمدید کہتے ہوئے والد عباسی صاحب کے تمام کاموں کو مکمل کرنے کے ساتھ ساتھ امروہہ کی عوام سے تعاون کی درخواست کی۔ پروفیسر ناشر نقوی نے اپنے خطاب میں کہا کہ مرحوم عباسی صاحب نے اردو ادب کی ترقی میں اپنی خدمات کے کردار پر خصوصی زور دیا جبکہ کاروان خلوص کے صدر سماجی کارکن سید محبوب حسین زیدی نے نہ صرف عباسی مرحوم کی کاوشوں اور ان کے بیٹے فیروز کمال عباسی کی جانب سے کیے جانے والے کاموں کا ذکر کیا اور ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا۔اس سے قبل عباسی مرحوم کی اہلیہ نایاب فاطمہ عباسی اور منیجنگ کمیٹی کے چیئرمین فیروز کمال عباسی نے چیر پرسن مسز ششی جین کو یادگاری، شال اور پھولوں کے گلدستے سے نوازا جب کہ کالج کی جانب سے تمام مہمانوں کا گلدستہ پیش کر استقبال کیا گیا۔ ریٹائرڈ اساتذہ کو بلدیہ کی صدر محترمہ ششی جین، ڈاکٹر فیضان احمد صدیقی وغیرہ نے شال پیش کر کے اعزاز سے نوازا جس میں ڈاکٹر وندنا رانی گپتا، مسز میرا گپتا، مرزا ساجد حسین ، شان مجتبیٰ، ولایت علی، اسلم عثمانی، مبین احمد، افضال محمد، حسن مہدی، شان رضا، سید تنویر حسن نقوی، عتیق الرحمان، راشدہ بیگم، عبدالغفار، مہتاب حسین، غلام حسنین وغیرہ کے نام قابل ذکر ہیں۔اس موقع پر ڈاکٹر نسیم احمد، ڈاکٹر سنگیتا گپتا، ڈاکٹر انجلی پاٹھک، دردانہ اکرم فاروقی، ڈاکٹر فرح صدیقی، عظمیٰ سیفی، رومانہ عابدی، ڈاکٹر نکہت نقوی، ارمان صدیقی، ڈاکٹر خضر حیات، جنید عالم، مسرورحسن خان، ارچنا شرما اور تمام شعبہ جات کےممبران موجود تھے اس سے قبل مسز ششی جین نےکیلسہ روڈ پر نفیس عباسی روڈ کےنام کے پتھرکی رونمائ کی پروگرام کے انعقاد میں قسیم اشرف، فیض الدین، ندیم خان وغیرہ نےاہم کردار ادا کیا۔ آخر میں پروگرام کے ناظم چیف پراکٹر پروفیسرمہتاب علی نےسب کا شکریہ ادا کیا۔