دیوبند: سمیر چودھری۔
سابق رکن اسمبلی اور سماجوادی پارٹی کے سینئر لیڈر معاویہ علی و  سینئر صحافی معین صدیقی کے والد چراغ صابر کا طویل علالت کے بعد آج میرٹھ کے ایک ہسپتال میں دوران علاج انتقال ہوگیاہے، وہ تقریباً 88 سال کے تھے، ان کے انتقال کی خبر سے شہر میں غم کی لہر دوڑ گئی اور محلہ دیوان میں واقع معاویہ علی کی رہائش گاہ پر شہر کے لوگوں کا تانتا لگ گیا۔
موصولہ تفصیل کے مطابق چراغ صابر گزشتہ کچھ دنوں سے سخت علیل تھے، انہیں دو دن پہلے مظفرنگر کے ایک اسپتال میں داخل کرایاگیا تھا، جنہیں گزشتہ روز مظفرنگر سے میرٹھ ریفرکردیاگیا تھا، جہاں منگل کی دیر شام انہوں نے آخری سانس لی۔ ان کے انتقال کی خبر ملتے ہی شہر کے لوگوں کا محلہ دیوان میں تانتا لگ اور پسماندگان سے اظہار تعزیت کرتے ہوئے چراغ صابر کے انتقال پر گہرے افسوس کااظہارکیا، مرحوم نیک ،دیندار اور صوم و صلوٰة کے پابند تھے اور کافی عرصہ انہوں نے دارالعلوم دیوبند میں بھی خدمات انجام دیں ہیں۔
پسماندگان میں بیوہ کے علاوہ چار بیٹے اور ایک بیٹی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ انکی نماز جنازہ اور تدفین بدھ کے روز عمل میں آئیگی۔