سہارنپور: سمیر چودھری۔
لڑکی کی آنر کلنک کے معاملہ میں سہارنپور عدالت نے باپ اور بھائی کو قصوروار مانا ہے، عدالت نے دونوں کو عمر قید کی سزا سنائی ہے، ساتھ ہی دونوں پر 20-20ہزار روپے کا جرمانہ عائد کیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی اس معاملہ میں عدالت میں پیش ہوئے جھوٹے گواہوں کے خلاف بھی کارروائی کے احکامات دیئے گئے ہیں۔

تفصیل کے مطابق تھانہ قطب شیر سہارنپور علاقہ کے حفظ الرحمن نے ستمبر 2016 میں قتل کا مقدمہ قائم کرایا تھا، حفظ الرحمن کا الزام تھا کہ عطاءالرحمن نام کا نوجوان ان کی بیٹی عظمیٰ سے چھیڑ خانی کرتا تھا، نکاح کے لئے دباﺅ ڈالنے پر اس نے عظمیٰ کا گلا دباکر قتل کردیا۔ پولیس کی تفتیش میں معلوم ہوا کہ عطاءالرحمن اور عظمیٰ کے درمیان پیار ومحبت تھا، اس پر شاہ زیب اور حفظ الرحمن نے عظمیٰ کا گلا دباکر قتل کردیا تھا۔ سرکاری وکیل امت تیاگی نے بتایا کہ اس مقدمہ کی سماعت اے ڈی جے 2سرلا دتہ کی عدالت میں ہوئی عدالت نے شاہ زیب اور حفظ الرحمن کو قتل کا قصوروار مانا اور دونوں کو عمر قید کی سزا سنائی اور ساتھ ہی گواہوں کے خلاف بھی کارروائی کے احکامات دیئے۔